شریک ہوں اور تازہ ترین معلومات حاصل کریں

رؤف رضا

  • غزل


تم بھی اس سوکھتے تالاب کا چہرہ دیکھو


تم بھی اس سوکھتے تالاب کا چہرہ دیکھو
اور پھر میری طرح خواب میں دریا دیکھو

اب یہ پتھرائی ہوئی آنکھیں لیے پھرتے رہو
میں نے کب تم سے کہا تھا مجھے اتنا دیکھو

روشنی اپنی طرف آتی ہوئی لگتی ہے
تم کسی روز مرے شہر کا چہرہ دیکھو

حضرت خضر تو اس راہ میں ملنے سے رہے
میری مانو تو کسی پیڑ کا سایا دیکھو

لوگ مصروف ہیں موسم کی خریداری میں
گھر چلے جاؤ رضاؔ بھاؤ غزل کا دیکھو

ویڈیو
This video is playing from YouTube Videos
This video is playing from YouTube رؤف رضا RECITATIONS رؤف رضا



00:00/00:00 تم بھی اس سوکھتے تالاب کا چہرہ دیکھو رؤف رضا

Leave a comment

+